ہم تیرا ناز تھے پھر تیری خوشی کی خاطر – جان ایلیا

Download John Elia Poetry ہم بصد ناز دل و جاں‌ میں بسائے بھی گئے پھر گنوائے بھی گئے اور بھلائے بھی گئے ہم ترا ناز تھے ، پھر تیری خوشی کی خاطر کر کے بے چارہ ترے سامنے لائے بھی گئے کج ادائی سے سزا کج کُلہی کی پائی میرِ محفل تھے سو محفل سے […]

ہر مال ہر چیز از محمد جمیل اختر

ایک تپتی ہوئی دوپہر میں ایک دیوار کے سائے میں ایک اداس ، پریشان آدمی تھوڑی تھوڑی دیر بعد پکارے “ہر مال ، ہر چیز” کون اسکی آواز سنے کون اسکی بات سنے ایسی تپتی دوپہر میں “ہر مال ، ہر چیز” “ہر چیز دس روپے میں یہ پلاسٹک کی چوڑیاں یہ مٹی کے برتن […]

زندگی کی راہوں میں بار ہا یہ دیکھا ہے

زندگی کی راہوں میں بار ہا یہ دیکھا ہے صرف سُن نہیں رکھا خود بھی آزمایا ہے جو بھی پڑھتے آئے ہیں اسکو ٹھیک پایا ہے اسطرح کی باتوں میں منزلوں سے پہلے ہی ساتھ چھوٹ جاتے ہیں لوگ روٹھ جاتے ہیں یہ تمہیں بتا دوں میں چاہتوں کے رشتوں میں پھر گرہ نہیں لگتی […]

میری ذات کے اندر جو جنگل ہے

مجھے کچھ باخبر لوگوں نے جنگل سے نکلنے کے کئی رستے بتائے تھے میں جنگل سے نکل آیا میں خوش تھا جان چھوٹی اب نئی دنیا بساؤں گا میں اپنی سوچ سے،تدبیر سے دھرتی کی بے ترتیب راہوں کو نئی ترتیب دوں گا خوبصورت شہر، سندر بستیاں آباد کر دوں گا مگر اب ایک مدت […]

مجھ سے پہلے تجھے جس شخص نے چاہا اس نے – احمد فراز

مجھ سے پہلے تجھے جس شخص نے چاہا اس نے شاید اب بھی تیرا غم دل سے لگا رکھا ہو ایک بے نام سی امید پہ اب بھی شاید اپنے خوابوں کے جزیروں کو سجا رکھا ہو میں نے مانا کہ وہ بیگانہ ٴپیمانِ وفا کھو چکا ہے جو کسی اور کی رعنائی میں شاید […]

مرے ہرکاب ہیں وحشتیں، میری و حشتوں کو قرار دے

مرے ہرکاب ہیں وحشتیں، میری و حشتوں کو قرار دے مجھے مہر وماہ سے غرض کیا، مجھے بھیک میں میرا یار دے کئی دن سے دل یہ دکھا نہیں، کوئی شعر میں نے کہا نہیں مرے حال پہ بھی نگاہ کر، کسی کیفیت سے گزار دے میں ہزار بجھتا دیا رہوں، سر دشت میں بھی […]

دو طرح کے لوگ محبت نہیں کر سکتے

ﺩﻭ ﻃﺮﺡ ﮐﮯ ﻟﻮﮒ ﻣﺤﺒﺖ ﻧﮩﯿﮟ ﮐﺮﺗﮯ ﺍﯾﮏ ﻣﯿﺮﮮ ﺍﻭﺭ ﺍﯾﮏ ﺗﻤﮩﺎﺭﮮ ﺟﯿﺴﮯ ﺍﯾﮏ ﺗﻢ ﮨﻮ ﮐﮧ ﺗﻤﮩﯿﮟ ﻣﯿﺮﮮ ﺑﺎﻃﻦ ﮐﺎ ﺣﺴﻦ ﻧﻈﺮ ﻧﮩﯿﮟ ﺁﺗﺎ ﺍﻭﺭ ﺍﯾﮏ ﻣﯿﮟ ﮨﻮﮞ ﮐﮧ ﻣﯿﮟ ﺗﻤﮩﯿﮟ ﺁﺭ ﭘﺎﺭ ﺩﯾﮑﮭﺘﯽ ﮨﻮﮞ ﺗﻤﮩﺎﺭﮮ ﺍﻭﺭ ﻣﯿﺮﮮ ﺟﯿﺴﮯ ﻟﻮﮒ ﻣﺤﺒﺖ ﻧﮩﯿﮟ ﮐﺮﺳﮑﺘﮯ.  

آنکھوں سے میرے اس لیے لالی نہیں جاتی

آنکھوں سے میرے اس لیے لالی نہیں جاتی یادوں سے کوئی رات جو خالی نہیں جاتی اب عمر نہ موسم نہ وہ رستے کہ وہ پلٹے اس دل کی مگر خام خیالی نہیں جاتی مانگے تو اگر جان بھی ہنس کے تجھےدےدیں تیری تو کوئی بات بھی ٹالی نہیں جاتی آئے کوئی آ کر یہ […]

اگر بزم ِ انساں میں عورت نہ ہوتی خیالوں کی رنگین جنت نہ ہوتی

اگر بزم ِ انساں میں عورت نہ ہوتی خیالوں کی رنگین جنت نہ ہوتی ستاروں کے دل کش فسانے نہ ہوتے بہاروں کی نازک حقیقت نہ ہوتی جبینوں پہ نور مسرت نہ ہوتی نگاہوں میں شانِ مروت نہ ہوتی گھٹاؤں کی آمد کو ساون ترستے فضاؤں میں بہکی بغاوت نہ ہوتی فقیروں کو عرفان ہستی […]

شریر چڑیو

شریر چڑیو! سنو مجھے اک گلہ ہے تم سے کہ منہ اندھیرے تمہاری بک بک، تمہاری جھک جھک تمہاری چوں چاں سماعتوں پر تمہاری دستک ہے غل مچاتی، مجھے جگاتی، بڑا ستاتی شریر چڑیو! یہ تم نہ جانو میں رات مشکل سے سو سکی تھی اداسیوں کے سمندروں میں میں اپنی آنکھیں ڈبو چکی تھی […]